Sad Love Poetry In Urdu

Sad Love Poetry in Urdu in Urdu is an assortment of tragic sections that perfectly catch the complicated feelings of adoration, yearning, and misfortune. These powerful sonnets, written in the rich and resonant Urdu language, dig into the profundities of human feelings, offering perusers a significant look into sad poetry the mixed insight of adoration. With suggestive words and profound articulations, this verse impacts any individual who has at any point felt the aches of solitary love one line deep quotes  motivational quotes or the despairing of a wrecked heart. It is a beautiful excursion through the maze of feelings that affection can inspire, causing it a convincing read for the people who to see the value in the force of words to convey the most significant human encounters.

This assortment of verse is a gold mine of stanzas that investigate the perplexing subtleties of adoration, sorrow, and the human spirit. The sonnets are written in the Urdu language, known for its idyllic lavishness and profound profundity.

Every sonnet in this assortment is a mind blowing show-stopper, painstakingly created to bring out many sentiments. They address subjects like pathetic love, the progression of time, the distress of partition, and the yearning for a lost love. The writer’s words resemble a mitigating medicine for the injured heart and a mirror to the profundities of one’s feelings.

The magnificence of Urdu verse lies in its capacity to communicate the unspeakable, and “Miserable Love Verse in Urdu” achieves this with artfulness. A must-peruse for anybody values the force of language to catch the pith of human encounters and is hoping to dive profound into the universe of sincere feelings. Whether you’re an enthusiast of verse or essentially somebody looking for comfort in the composed word, this assortment makes certain to impact you.

Sad Love Poetry In Urdu
Sad Love Poetry In Urdu
Sad Love Poetry In Urdu
Sad Love Poetry In Urdu

 

Sad Love Poetry In Urdu
Sad Love Poetry In Urdu

بہت اذیت ناک ہوتا ہے
کسی کے پاس وہ دیکھنا جو آپ سے چھینا گیا ہو

Bohat aziat naak hota hai
Kisi ke paas woh dekhna jo aap se chenna gaya ho

تیری ایک جھلک کو ترس جاتا ہے دل میرا
قسمت والے ہیں وہ لوگ جو روز تیرا دیدار کرتے ہیں

Teri aik jhalak ko taras jata hai dil mera
Qismat walay hain woh log jo roz tera deedar karte hain

 

 

یہ ساولی رنگت یہ سادہ سا ہولیہ یہ اداس آنکھیں
ہم سے کوئی جو دل لگائے تو کیوں لگائے

Yeh sawli rangat yeh saada sa huliya yeh udaas ankhen
Hum se koi jo dil lagaye to kyun lagaye

میری غربت نے کیا مجھ کو زمانے میں بدنام”
“وہ تیری دولت ہے جس نے تیرے عیب چھپا رکھے ہیں

Meri gurbat ne kiya mujh ko zamane mein badnaam
Woh teri doulat hai jis ne tere aib chhupa rakhay hain

 کیسے کریں ہم خود کو تیرے پیار کے قابل
جب ہم عادتیں بدلتے ہیں تم شرطیں بدل لیتے ہو

Kaise karen hum khud ko tairay pyar ke qabil
jab hum adaten bdalty hain tum shartain badal letay ho

وہ منہ لگاتا ہے جب کوئی کام ہوتا ہے۔
جو اس کا ہوتا ہے سمجھو وہ غلام ہوتا ہے
کسی کا ہوکر دوبارہ نہ آنا میری طرف
محبتوں میں حلالہ حرام ہوتا ہے

Woh mun lagata hai jab koi kaam hota hai
Jo is ka hota hai samjhoo woh ghulam hota hai
Kisi ka hokar dobarah nah aana meri taraf
muhabaton mein halala haram hota hai

 

 

آج اشکوں کے تلے شجر تیرے شہر جلائیں جائے
اور غم پرانے جتنے بھی ہیں سب بھلائے جائیں گے
اور میں سوچتا ہوں کہ تجھ میں کیا بچے گا
بچے گا کیا تجھ میں جب تم سے ہم گھٹائیں جائیں گے

Aaj ashkon ke taley shajar tairay shehar jalayen jaye
Aur gham puranay jitne bhi hain sab bhulae jayen ge
Aur mein sochta hon ke tujh mein kya bachay ga
Bachay ga kya tujh mein jab tum se hum ghatain jayen ge

میں جس کے عشق میں کافر ہوا
وہ کسی اور کی خاطر مسلمان ہوگیا

Mein jis ke ishq mein kafir huwa
Woh kisi aur ki khatir musalman hogaya

Sad Love Poetry In Urdu
Sad Love Poetry In Urdu
Sad Love Poetry In Urdu

!میں تنہائی کو تنہائی میں تنہا کیسے چھوڑ دوں۔۔۔۔”
“تنہائی نے تنہائی میں میرا بہت ساتھ دیا ہے

Mai tenahaaye mai tenhai ko tanha kaise chor doo
Tenahaaye ny tenahaaye mai mera bohat saath diya ha

☹‏ﻣﯿﺮﮮ ﻟﻔﻈﻮﮞ ﺳﮯ ﻧﮧ ﮐﺮ، ﻣﯿﺮﮮ ﮐﺮﺩﺍﺭ ﮐﺎ ﻓﯿﺼﻼ
“…ﺗﯿﺮﺍ ﻭﺟﻮﺩ ﭨﻮﭦ ﺟﺎﺋﮯ ﮔﺎ، ﻣﯿﺮﯼ ﺣﻘﯿﻘﺖ ﮈﮬﻮﻧﮉتے ڈھونڈتے

Mere Laphzo say na kar mere qiradaar ka faisala
Tera vajood toot jaaye ga meri hakeekat dhoondhatee dhoondhatee

😞چار دن آنکھ میں نمی ہو گی۔۔۔۔”
“ہم مر بھی گئے تو کیا کمی ہو گی۔۔

Chaar Din Ankh Ma Namee Ho Gi
Ham Merr Bee Gae To Kya Kamee Ho Gi

دیکھنے کو سارا عالم بھی کم ہے۔”
“.چاہنے کے لیے ایک چہرہ بہت۔۔

Dekhany ko saara aalam bee kam hai
Chaahany ka liye ek chehara bohat

😥مسکرانے سے شروع اور رلانے پہ ختم”
“یہ اک ظلم ہے جسے لوگ محبت کہتے ہیں

Muskurany Se Shuru Aur Rulane Pay Khatam
Yeh Ik Zulm Hai Jisay Log Mohabbat Kehte Hain

تو مجھے چھوڑ کے جانے لگا تو یقین آیا ہے”
“سانسوں کے سوا کچھ بھی تو ضروری نہیں ہوتا

Too mujhe chor ka jaane laga to yakeen aaya hai
Saanso ka siva to kuchh bee zarooree ni hota

 یاد اس کی ابھی بھی آتی ہے”
“بری عادت ہے،کہاں جاتی ہے

Yaad uss ki abhi bhi aati hai
Buri aadat hai, kaha jati hai

💘کبھی پاس بیٹھو تـــو بتائیں کہ درد کیا ہے”
” یوں دور سے پوچھو گے تو خیریت ہی بتائیں گے

Kabhee paas baitho to bataaye k dard kya hai
U door say puchho gay to khairiyat hee bataaye gay

ضبط کی آخری منزل پہ کھڑا شخص ہوں میں”
😭”…اس سے آگے میری آنکھوں نے پگھل جانا ہے

Zabaat Kee Aakharee Manzil Pay Khada Shakhs Hu Ma
Iss Say Aagaye Meree Aankhon Ny Pigal Jaana Hai

🖤انتظار تھا ہم کو جن کا برسوں سے”
“وہ آئے تو تھے مگر بچھڑ جانے کے لیے

Intizaar Tha Ham Ko Jin Ka Barasoo See
Vo Aye To Thee Magar Bichar Jaany Ka Liye

Sad Poetry In Urdu 2 Lines

سیکھ رہا ہوں میں بھی انسانوں کو پڑھنے کا ہنر”
“سنا ہے کتابوں سے ذیادہ چہروں پہ لکھا ہوتا ہے

Seekh Raha Hon Mein Bhi Insanon Ko Parhnay Ka Hunar
Suna Hai Kitabon Se Ziada Cheharon Pay Likha Hota Hai

کچھ لوگ کہتے تھے کہ ھر موڑ پہ یاد کریں گے آپ کو”
“…لیکن شاید انکا پورا راستہ ھی سیدھا تھا _نہ موڑ آیا نہ ھم یاد آۓ.‏

Kuch log kehte thay ke har mourr pay yaad karen ge aap ko
Lekin shayad Inka poora rasta hi seedha tha na mourr aaya nah hmm yaad aye

❤خیال اُنھی کے آتے ہیں جن سے دل کا رشتہ ہو”
✨”ہر شخص اپنا ہو جائے سوال ہی پیدا نہیں ہوتا

Khayaal Unheen Ke Atay Hain Jin Se Dil Ka Rishta Ho
Hr Shakhs Apna Ho Jaye Sawal Hi Peda Nahi Hota

🥀🥀🥀 کچھ تلخ حقیقتیں تھی اتنی”
“کہ خواب ہی سارے ٹوٹ گئے۔۔۔۔۔

Kuch Talkh Haqeqteen Thi Itni
Ke Khawab Hi Saaray Toot Gaye….

😔مدتوں بعد اسے خوش دیکھا تو یہ احساس ھوا
…..کہ کاش ___ میں اسے پہلے چھوڑ دیتا

Mdton Baad Usay Khush Dekha To Yeh Ehsas Huwa
Ke Kash ___ Mein Usay Pehlay Chore Deta

!کٹ تو جاتی ہے مگر رات کی فطرت ہے عجیب
‎🔥🔥✌️اس کو چپ چاپ جو کاٹو تو صدی بن جاتی ہے۔۔۔۔۔

Kat To Jati Hai Magar Raat Ki Fitrat Hai Ajeeb
Is Ko Chup Chaap Jo Katu To Sadi Ban Jati Hai

میرے ہاتھ کی لکیروں میں یہ عیب ہے محسن”
“😭میں جس شخص کو چاہوں وہ میرا نہیں رہتا

Mere Haath Ki Lakiron Mein Yeh Aib Hai Mohsin
Mein Jis Shakhs Ko Chahoon Woh Mera Nahi Rehta

🔥زنجیروں سے بھاند کر ہمیں ”
“!…لفظوں سے مارا گیا

Zanjeeroon Se Band kar Hamyy
Lafzon Se Mara Gaya….!

حیران نہیں ہوں فقط یہ دیکھ رہی ہوں۔۔۔۔”
“کتنا گر رہے ہیں لوگ مجھے گرانے میں ۔۔۔۔

Heran Nahi Hon Faqat Yeh Dekh Rahi Hon…..
Kitna Gir Rahay Hain Log Mujhe Giranay Mein…

یہ اداس شاعری میں یونہی نہیں لکھتی”
“کے جب ٹوٹتی ہوں تو لفظوں میں بکھر جا تی ہوں

Yeh Udaas Shairi Mein Yuhin Nahi Likhti
Ke Jab Tuutatii Hon To Lafzon Mein Bikhar Jati Hon

سر درد تو محض ایک نام ہے ۔۔۔۔۔”
کچھ باتیں
“دماغ کو ایسے چبتی ہیں کے ہم برداشت نہیں کر پاتے

Serr Dard To Mehez Aik Naam Hai….
Kuch Baatein
Dimagh Ko Aisay Chubti Hain Ke Hum Bardasht Nahi Kar Paate

Sad Poetry In Urdu TEXT

جس قدر جس کی قدر کی
اس قدر بے قدر ہوئے ہم ۔

Jis Qader Jis Ki Qader Ki
Is Qader Be Qader Hue Hum.

تکلیف میں بھول گیا میں ڈھنگ ہی دعا کا
!!__خدا کو ہی دینے لگا میں واسطہ خدا کا

Takleef Ein Bhool Gaya Mein Dhang Hi Dua Ka
Khuda Ko Hi Dainay Laga Mein Vaastaa Khuda Ka__! !

اُلجھے اُلجھے بِکھرے بِکھرے روز و شب دیکھے گا کون ”
“🥀لوگ تیرا جُرم دیکھیں گے،سبب دیکھے گا کون۔

Uljhay Uljhay Bikhare Bikhare Roz O Shab Dekhe Ga Kon
Log Tera Jurm Dekhen Ge, Sabab Dekhe Ga Kon

میرے لفظوں کی تعریف کرتے ہو”
“میرا دکھ نہیں پوچھو گے ۔۔۔؟؟

Mere Lafzon Ki Tareef Karte Ho
Mera Dukh Nahi Pucho Ge….??

بس میری محبت کو سمجھ نہ پائے تم”
“باقی میری ہرغلطی کابرابرحساب رکھتےہو

Bas Meri Mohabbat Ko Samajh Nah Paye Tum
Baqi Meri Hr Galti Ka Baraber Hisab rakhtay ho

وہ ایک شخص کسی طور بس مل جاتا مجھے”
“مجھے منظور تھے پھر جتنے بھی خسارے ہوتے

Woh Aik Shakhs Kisi Tor Bas Mil Jata Mujhe
Mujhe Manzoor Thay Phir Jitne Bhi Khasaray Hotay

بات جب بھی بگڑی ہے لفظوں پہ بگڑی ہے”
“کاش کے ہم بے زبان ہوتے۔

Baat Jab Bhi Bigri Hai Lafzon Pay Bhigri Hai
Kash Ke Hum Be Zabaan Hotay

تم نے کونسا ہجر سہا تم کیا جانو ”
“کوئی کیوں دیوار سے باتیں کرتا ہے

Tum Ne Konsa Hijar Saha Tum Kya Jano
Koi Kyun Deewar Se Baatein Karta Hai

تــم مـیـری باتوں کا جـواب نهیـں دیتـے تو كيـا هـوا ”
“آؤ گے جـب هـمـاری قبـر پر تو هـم بھی ایسـا هی کریں گے

Tum Meri baton ka Jawab Nahi Detty To Kya Huwa
Ao Gy Jb Hamari Qaber Par To Hum Bhi Aisa hi‬ Karen Ge

اس طرح بے چین نہ کیا کرو آکر ”
“یہ سزا کافی ہے کہ تم میرے پاس نہیں

Is Terhan Be Chain Nah Kya Karo Aakar
Yeh Saza Kaafi Hai Ke Tum Mere Paas Nahi

میری محبت نہ سہی شاعری کی تو داد دے”
“!..روز تیرا ذکر کرتا ہوں تیرا نام لیے بغیر

Meri Mohabbat Na Sahi Shayri Ki To Daad De,
Roz Tera Zikr Krta Hun Tera Nam Liye Bagair.!

Sad Poetry In Urdu SMS

 

“اکثر سہارے ہی،بے سہارا کرتے ہیں”

Aksar Saharay Hi, Be Sahara Karte Hain

ہر شخص نہیں ہوتا ہمدرد”
“ہر شخص کو نہ بتایا کرو داستاں

Har Shakhs Nahi Hota Hamdard
Har Shakhs Ko Nah Bataya Karo Dastan

مجھے کہا گیا تھا محنت کرنا”
“افسوس! میں نے نکتہ گِرا کر محبت کر لی۔

Mujhay Kaha Giya Tha Mehnat Kerna
Afsoos! Main Ne Nukta Gira Ker Mohabbat Kerli

پھر یوں ہوا کہ
جب مجھے دوسروں کی ضرورت پڑی،
تو ہر ایک کو مجبور پایا
Phir yun hua ke

Jab mujhay dusroon ki zaroorat pari,
To har ek ko majboor paya

.جب میں لوٹوں گا تو صدیوں کی عمر لاؤں گا”
“کہ تیرے پاس مجھے مختصر نہیں رہنا

Jab Mein Lotoungaa To Sadiiyon Ki Umar Lau Ga
Ke Tairay Paas Mujhe Mukhtasir Nahi Rehna

خود کو جینے کی تسلی میں بہانے نہیں دیتا
اب تیری یاد بھی آئے تو آنے نہیں دیتا میں
غم. سے کہتا ہوں کہ آؤ تمہیں جانے نہیں دوں گا
اور وہ آ جائے تو پھر اس کو جانے نہیں دیتا

Khud Ko Jeeney Ki Tasalii Mein Bahanay Nahi Deta
Ab Teri Yaad Bhi Aaye To Anay Nahi Deta Mein
Gham Se Kehta Hon Ke Aao Tumhe Jane Nahi Dun Ga
Aur Woh Aa Jaye To Phir Is Ko Jane Nahi Deta

“لوگ ہمیشہ ساتھ تو رہتے ہیں مگر صرف یادوں میں “

Log Hamesha Sath To Rehtay Hain Magar Sirf Yaado Mein

کہاں سے لاؤں ہر روز اک نیا دل
توڑنے والوں نے تو تماشہ بنا رکھا ہے

Kahan Se Layin Her Roz Ik Naya Dil
Tordnay Waloon Nay To Tamasha Bana Rakha Hay

Sad Poetry In Urdu For Friends

جو دل کے سارے درد بانٹ لے”
“ایسے دوست زندگی میں بہت کم ملتے ہیں

Jo Dil Ke Saaray Dard Baant Le
Aisay Dost Zindagi Mein Bohat Kam Mlitay Hain

❤❤!!!!!……..وقت ملے تو کبھی رکھنا قدم میرے دل کہ آنگن میں
اے___دوست
❤!!!!!!!……..حیران رہ جاؤ گے میرے دل میں اپنا مقام دیکھ کر

Waqt Miley to kabhi rakhna qadam mere dil ke aangan mein
ae ___DOST
Heran reh jao ge mere dil mein apna maqam dekh kar

یوں لگے دوست تیرا مجھ سے خفا ہوجانا”
“جس طرح پھول سے خوشبو کا جدا ہو جانا

Yun Lagey Dost Tera Mujh Se Khafa Hojana
Jis Terhan Phool Se Khushbu Ka Judda Ho Jana

دوست دوست نہیں دل کی دعا ہوتا ہے”
“محسوس تب ہوتا ہے جب وہ جدا ہوتا ہے

Dost Dost Nahi Dil Ki Dua Hota Hai
Mehsoos Tab Hota Hai Jab Woh Judda Hota Hai

کون کہتا ہے یاری برباد کرتی ہے”
“کوئی نبھانے والا ہو تو دنیا یاد کرتی ہے

Kon Kehta Hai Yaari Barbaad Karti Hai
Koi Nibhanay Wala Ho To Duniya Yaad Karti Hai

تمہیں تو دشمنوں کی دشمنی نے مار ڈالا ہے
مجھے دیکھو میں اپنے دوستوں سے زخم کھاتا ہوں

Tumhe To Dushmanon Ki Dushmani Ne Maar Dala Hai
Mujhe Dekho Mein Apne Doston Se Zakham Khata Hon

دعوے دوستی کے مجھے نہیں آتے یار”
“ایک جان ہے جب دل چاہے مانگ لینا

Daaway Dosti Ke Mujhe Nahi Atay Yaar
Aik Jaan Hai Jab Dil Chahay Maang Lena

…دوستی سمیٹ لیتی ہے زمانے بھر کے رنج و غم
…سنا ہے یار اچھے ہوں تو کا نٹے بھی نہیں چبھتے

Dosti Samaitt Layte Hai Zamane Bhar Ke Ranj o Gham
Suna Hai Yaar Achay Hon To Kanty Bhi Nahi Chubhtay

ہم اپنی اسی ادا پر تھوڑا غرور کرتے ہیں”
“نفرت ہو یا دوستی دونوں بھر پور کرتے ہیں

Hum Apni Isi Ada Par Thora Ghuroor Karte Hain
Nafrat Ho Ya Dosti Dono Bhar Pur Karte Hain

کہ تیرے بغیر گزارا نہیں کسی صورت
اسے یہ بات بتانے سے بات بھگڑی

Ke tere baghair guzaraa nahi kisi soorat
Usay yeh baat batany se baat bhigree

Sad Love Poetry In Urdu
Sad Love Poetry In Urdu
Sad Love Poetry In Urdu
Sad Love Poetry In Urdu
Sad Love Poetry In Urdu
Sad Love Poetry In Urdu

Sad Love Poetry in English

In the nursery of our affection, when lavish and fair,
Presently shriveled, the petals of trust lie dispersed hopelessly.
Offers murmured in too much’s delicate shine,
Presently reverberation like phantoms, in shadows they go.

Your nonappearance is a quiet, sad tune,
Played on the series of this friendless moon.
The stars above, observers to our situation,
Shed tears of stardust in the velvet evening.

An affection that once ignited with a savage, brilliant fire,
Presently glints like a flame in the breeze’s savage game.
Recollections scratched like scars upon my heart,
As I watch our romantic tale gradually self-destruct.

In the remnants of our fantasies, I’ll perpetually abide,
A miserable, love-injured soul, under a grave spell.
However you’ve left, love, I will not neglect,
The ambivalent minutes, the adoration we once met.

Leave A Reply

Please enter your comment!
Please enter your name here